14 اپريل 2020(سیدھی بات نیوز سرویس) ایران نے منگل کو یورینیم افزودگی میں اضافہ کرکے 60 فیصد تک کردیا ہے۔ ارنا نیوزایجنسی نے ایران کے نائب وزیرخارجہ عباس اراغچی کے حوالے سے یہ اطلاع دی۔ ایجنسی نے کوئی اضافی تفصیل نہیں دی، لیکن نطنز میں ایک جوہری پلانٹ میں حملے کے بعد ایٹم سے جڑے کاموں کو بڑھانے کے ایران کے ارادوں کے درمیان یہ خبرآئی ہے۔ مسٹر اراغچی نے منگل کو بتایا کہ ایران کے نطنز جوہری پلانٹ میں 1000 اور سینٹریفیوز قائم کرنے کا منصوبہ ہے۔ پریس ٹی وی براڈکاسٹرنے کہا، ’’ایران نطنز جوہری پلانٹ میں 1000 مزید سینٹریفیوز لگائے گا۔ ایران کے ایٹمی انرجی آرگنائزیشن نے اتوار کی صبح بتایا کہ نطنز پلانٹ میں ایک حملہ ہوا ہے جس سے اس کی بجلی تقسیم کا نیٹ ورک متاثرہوا ہے۔ آرگنائزیشن کے سربراہ علی اکبر صالحی نے اس واقعہ کو ’جوہری دہشت گردی‘ قرار دیا۔

(قومی آواز)

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here