رپورٹ کے مطابق اسپتال میں داخل ہونے کے لئے لوگوں کی بڑی تعداد آ رہی ہے اور ان کی موت واقع ہو رہی ہے۔ کچھ شہروں میں لوگ علاج کے منتظر ہیں۔

برازیلیا:7 اپريل 2020(سیدھی بات نیوز سرویس)  برازیل میں پہلی بار، کورونا سے ایک دن میں ریکارڈ 4000 سے زائد افراد کی جانیں گئیں۔ بی بی سی کی رپورٹ میں منگل کے روز کہا گیا ہے کہ نئی اموات کے اعداد و شمار کے بعد اس بیماری سے مرنے والوں کی تعداد 337000 ہوگئی ہے۔ رپورٹ کے مطابق اسپتال میں داخل ہونے کے لئے لوگوں کی بڑی تعداد آ رہی ہے اور ان کی موت واقع ہو رہی ہے۔ کچھ شہروں میں لوگ علاج کے منتظر ہیں۔ محکمہ صحت کے عہدیداروں نے بتایا کہ ملک کے بہت سارے علاقوں میں صحت کا نظام خراب ہونے کے دہانے پر ہے۔لیکن صدر جیئر بولسنارو کووڈ کیس اور اموات کی تعداد بڑھنے کے باوجود اس بیماری کے پھیلاؤ کو روکنے کے لئے لاک ڈاؤن لگانے کے حق میں نہیں ہیں۔ ان کا موقف ہے کہ لاک ڈاؤن سے معیشت کو پہنچنے والا نقصان وائرس کے اثرات سے بھی بدتر ہوگا اور عدالتوں میں مقامی حکام کی عائد کی گئی کچھ پابندیوں کو واپس لینے کی کوشش کر رہے ہیں۔منگل کے روز صدر کی رہائش گاہ کے باہر حامیوں سے بات کرتے ہوئے انہوں نے کوارنٹائن اقدامات پر تنقید کرتے ہوئے یہ دعوی کیا کہ وہ موٹاپا اور افسردگی سے جڑے تھے اور بے روزگاری اس کی ایک وجہ ہے۔ انہوں نے گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ہونے والی 4195 اموات پر کوئی تبصرہ نہیں کیا۔ برازیل نے وزارت صحت کے مطابق ملک میں کورونا وائرس کے 1.3 لاکھ ست زیادہ کیسز رپورٹ ہوئے ہیں۔ مارچ میں ہی کورونا سے ریکارڈ 66570 افراد ہلاک ہوئے تھے۔

(قومی آواز)

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here