ہندستان اور چین کی سرحد پرجاری تنازعہ کیبیچ کشمیرانتظامیہ نیجو ایل پی جی اسٹاک کرنے اور اسکول بلڈنگ خالی کرانے کا حکم جاری کیاہے اس نیعوام میں دہشت پیدا کر دی ہے

29جون 2020(سیدھی بات نیوز سرویس) لداخ کی وادی گلوان میں 20 فوجی جوانوں کی شہادت کے بعد سے ہند چین تعلقات میں مستقل تناؤ بڑھ رہاہے۔ اے بی پی نیوزپورٹل کے ذریعہ شائع ایک رپورٹ کیمطابق جمو ں وکشمیر کیخوراک ورسد اور صارفین معاملوں کے محکمہ نیایک حکم جاری کیا ہے جس میں کہاگیاہے کہ ایل پی جی سلینڈر کے اسٹاک کویقینی بنائیں کیونکہ آنے والے دنوں میں ہائی وے بند ہونے کی وجہ سے سلینڈرلانے میں مسائل کھڑے ہوسکتے ہیں۔حکم میں کہا گیا ہے کہ پہاڑوں کے کھسکنے کی وجہ سے قومی شاہرہ بندہو سکتی ہے اور سپلائی متاثر ہوسکتی ہے۔ واضح رہے نیوز پورٹل کے مطابق تیل کمپنیوں کے پاس مناسب اسٹاک ہے جو پندرہ روز سے ایک ماہ تک چل سکتا ہے اور قومی شاہرہ پر حالت ایسی بری نہیں ہیکہ اتنے لمبیوقفہ تک بند کرنے کی ضرورت پڑے۔ ادھر دوسے حکم کے مطابق گندربل میں سلامتی دستوں کے لئے اسکول بلڈنگوں کو خالی کرنے کے لئے کہا گیا ہے۔نیوزپورٹل کے مطابق کشمیر میں گندر بل ضلع لداخ کے کارگل سے سٹا ہوا ہے۔اس معاملہ پر سابق وزیر اعلی عمر عبداللہ نے ٹویٹ کر کے لکھا ہے کہ یہ احکامات کشمیر میں دہشت پیدا کررہے ہیں۔واضح رہے اسکول بلڈنگوں کو خالی کرانے کے حکم میں کہاگیا ہے کہ امرناتھ یاترا 2020 کی وجہ سیان اسکول بلڈنگوں کو سلامتی دستوں کے لئے خالی کرایا جا رہا ہے۔

(قومی آواز)

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here