یدی یورپا نیکہا کہ بی جے پی کورکمیٹی کیاجلاس میں انہوں نے جوباتیں کہی تھیں، ان کا غلط مطلب نکالا جا رہا ہیاورکانگریس اس پورے معاملہ کا سیاسی فائدہ اٹھانیکی کوشش کر رہی ہے۔

04 نومبر (سیدھی بات نیوز سرویس) بنگلور: کرناٹک کے وزیر اعلی بی ایس يدی یورپا نیایک آڈیوکلپ کیمعاملہ پربھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) صدراورمرکزی وزیرداخلہ امت شاہ سیاستعفی کے کانگریس کے مطالبہ پراتوارکواپنا ردعمل ظاہرکرتے ہوئیکہا کہ اس طرح کا مطالبہ کرنا کانگریس کی بیوقوفی ہے۔ انہوں نیکہا کہ17 اراکین اسمبلی کیاستعفیٰ کیلئیکانگریس امت شاہ کوذمہ دارٹھہرا رہی ہیاوراس بات کیلئیامت شاہ سیاستعفی کا مطالبہ حماقت ہے۔وزیراعلیٰ بی ایس يديورپا نے صحافیوں سیکہا ’’ممبران اسمبلی کیاستعفیٰ کیلئیامت شاہ ذمہ دارنہیں ہیں، جن کی وجہ سے ریاست میں جنتا دل- کانگریس مخلوط حکومت گرگئی تھی۔ ان ممبران اسمبلی نیخود ہی استعفی دیا تھا اورانہوں نیاپنا مستقبل بھی خود ہی طیکیا تھا‘‘۔وزیراعلی نیکہا کہ بی جے پی کورکمیٹی کیاجلاس میں انہوں نے جوباتیں کہی تھیں، ان کا غلط مطلب نکالا جا رہا ہیاورکانگریس اس پورے معاملہ کا سیاسی فائدہ اٹھانیکی کوشش کر رہی ہیاوریہ مسئلہ سپریم کورٹ میں ٹھہرنہیں پائیگا۔ اپوزیشن پارٹی کے رہنما اورسابق وزیراعلیٰ سدارميا پرطنزکرتے ہوئے بی ایس يديورپا نیکہا کہ انہیں بالکل بھی سمجھ نہیں ہیاورایک وکیل ہوکربھی وہ بغیرکسی معلومات کیاس طرح کیالزامات لگا رہے ہیں۔ انہوں نیکہا کہ آئندہ 5 دسمبرکوہونے والے ضمنی انتخابات میں بی جے پی ان نااہل ٹھہرائیگئے ممبران اسمبلی کوامیدواربنائے گی۔

نیوز18

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here