پاکستان میں عام آدمی کے لئے حالات دن بدن بدتر ہوتے جا رہے ہیں۔ اب تو حالت یہ ہے کہ پاکستان میں لوگ چائے کے لئے بھی ترس رہے ہیں۔ دراصل، دودھ کی قیمتیں آسمان چھو رہی ہیں۔

11ستمبر (سیدھی بات نیوز سرویس) اسلام آباد۔ پاکستان میں عام آدمی کے لئے حالات دن بدن بدتر ہوتے جا رہے ہیں۔ اب تو حالت یہ ہے کہ پاکستان میں لوگ چائے کے لئے بھی ترس رہے ہیں۔ دراصل، دودھ کی قیمتیں آسمان چھو رہی ہیں۔ ایک لیٹر دودھ کی قیمت 140 روپئے فی لیٹر پٹرول سے بھی تجاوز کر گئی ہے۔میڈیا رپورٹوں کے مطابق، دودھ، پٹرول۔ ڈیزل سے بھی مہنگا فروخت ہو رہا ہے۔ پاکستان میں اس وقت پٹرول 113 روپئے اور ڈیزل 91 روپئے فی لیٹر کی شرح سے فروخت ہو رہے ہیں۔ حالانکہ، دودھ کی سرکاری قیمت 94 روپئے فی لیٹر ہے۔پاکستانی اخبار ایکسپریس نیوز کے مطابق، ڈیری مافیا محرم کے موقع پر دودھ کی بڑھی مانگ کے درمیان لوگوں سے لوٹ مار پر اتر آیا اور منمانی قیمت وصول کر رہا ہے۔ ایسے میں محرم کے موقع پر دودھ کی قیمتیں ساتویں آسمان پر پہنچ گئیں۔پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی اور سندھ صوبہ میں دودھ کی قیمت 140 روپئے فی لیٹر تک پہنچ گئی ہے۔ آپ کو بتا دیں کہ محرم کی نویں اور دسویں تاریخ کو لوگوں کے بیچ بانٹنے کے لئے دودھ کی کھیر وغیرہ بنائی جاتی ہے۔

(قومی آواز)

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here