مینچسٹر:14جون 2019(سیدھی بات نیوز سروس/ زرائع) گلوبس اسپورٹس فین ایوارڈ سے سرفراز ہونے والے 70 سالہ ’چاچا کرکٹ‘ عرف عبد الجلیل نے ہندوستان اور پاکستان کے درمیان عمران-کپل ٹرافی کے نام سے ٹورنامنٹ کا انعقاد کیے جانے کی خواہش کا اظہار کیا ہے۔ واضح رہے کہ ’چاچا کرکٹ‘ پاکستان کرکٹ ٹیم کے نامور پرستار ہیں۔دنیا بھر میں پہلی مرتبہ فینز کو سرفراز کیے جانے والے گلوبل اسپورٹس فین ایوارڈ کے کچھ گھنٹوں قبل ایک ڈاکیومنٹری کو انٹرویو دیتے ہوئے انہوں نے اپنی خواہش ظاہر کی۔ یہ پہلا موقع ہے جب دنیا بھر کے 5 بڑے فینز کو ایوارڈ سے سرفراز کیا جائے گا۔ اس ایوارڈ سیریمنی کا انعقاد عالمی کپ میں ہندوستان بمقابلہ پاکستان میچ سے دو دن قبل مینچسٹر کے ایلکس ٹاؤن ہال میں کیا جائے گا۔اس تاریخی موقع پر چاچا کا کہنا ہے، ’’ان 50 سالوں میں میں نے 500 سے زیادہ میچ دیکھے ہیں اور اپنی ٹیم کے لئے چیئر بھی کیا ہے۔ اتنے سالوں میں پہلی بار مجھے میرے اس جنون کے لئے سرفراز کیا جا رہا ہے جس کے لئے میں خود کو خود قسمت سمجھتا ہوں۔ یہ ایوارڈ آنے والی کئی نسلوں کی حوصلہ افزائی کرے گا۔‘‘چاچا کرکٹ نے مزید کہا، ’’مجھے لگتا ہے کہ دونوں عظیم کپتانوں عمران خان اور کپل دیو کو اعزاز دیتے ہوئے عمران-کپل ٹرافی کا آغاز ہونا چاہیے۔ یہ نہ صرف ان لجینڈری کرکٹوں کو ہمیشہ ہمارے دلوں میں زندہ رکھے گی بلکہ بارڈر-گواسکر ٹرافی جیسے ٹورنامنٹوں کو بھی فروغ دیگا۔‘‘اس موقع پر گلوبل اسپورٹس ایوارڈ کے کیوریٹر سنیل یش کالرا نے کہا، ’’ابھی موسم کے مشکل حالات کے پیش نظر انگلینڈ میں فلمنگ کرنا چیلنجنگ ضرور ہے لیکن فینز کے لئے اپنی طرف سے کچھ کرتے ہوئے کافی خوشی محسوس ہوتی ہے۔ ’چاچا کرکٹ‘ نہ صرف گلوبل اسپورٹس فین ایوارڈ کے گولڈ میڈلسٹ ہیں بلکہ ڈاکیومنٹری میں ان کا اہم کردار بھی ہے۔انہوں نے کہا، ’’چاچا نہ صرف تجربہ کار فین ہیں بلکہ انہیں میچ کے تمام الٹ پھیروں اور مراحل کی بھی بخوبی سمجھ ہے اور ساتھ ہی اچھے کمنٹیٹر بھی ہیں، جوکہ خود تو فین ہیں ہی، ان کی فین فالوونگ بھی کافی زیادہ ہے۔ اپنے انٹرویو میں انہوں نے کئی باتوں کا اشتراک کیا ہے، انہوں نے ہندوستانی کھلاڑیوں میں سچن تندولکر، کپل دیو اور نوجوت سنگھ سدھو کو اپنے پسندیدہ کھلاڑی قرار دیا۔‘‘

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here