دوحہ:16اپریل 2019(سیدھی بات نیوز سروس/ زرائع)دوحہ میں ایرانی سفیر نے مطالبہ کیا ہے کہ خطے میں امریکی دباؤ کا مقابلہ کرنے کے لیے ایران، قطر اور عراق کے درمیان سہ فریقی اتحاد تشکیل دیا جائے۔جنوبی ایران میں سرمایہ کاری کے مواقع کے حوالے سے دوحہ میں منعقد ایک کانفرنس کے دوران ایرانی سفیر محمد علی سبحانی نے کہا کہ قطر اور عراق کو چاہیے کہ وہ امریکا کا سامنا کرنے کے لیے ایک اتحاد میں شامل ہوں۔تاہم ایرانی سفیر کی امیدیں ممکنہ طور پر پوری نہیں ہو سکیں گی۔عراق پہلے ہی اپنے سرکاری موقف کا اعلان کر چکا ہے کہ وہ کسی بھی علاقائی اتحاد میں شمولیت اختیار نہیں کرے گا اور تمام فریقوں کے ساتھ اچھے تعلقات کے لیے کوشاں ہے۔یہاں تک کہ عراقی وزیراعظم عادل عبد المہدی جو سعودی عرب کے دورے کی تیاری کر رہے ہیں ،،، وہ ایک سے زیادہ مرتبہ اس بات پر زور دے چکے ہیں کہ علاقائی جھمیلوں سے کنارہ کشی اختیار کرنے کی پالیسی پر کاربند رہیں گے۔مذکورہ عراقی موقف کی روشنی میں اب قطر ہی اس دو طرفہ اتحاد کا نمایاں ترین شریک رہ جاتا ہے.. دوحہ نے حالیہ چند برسوں میں ایران کے ساتھ مختلف سطحوں پر اپنے تعلقات کو مضبوط بنایا ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here