رباط:14 جنوری2019(سیدھی بات نیوز سروس/ زرائع)مراکش کی وزارت تعلیم نے درسی کتاب میں مملکت فلسطین کا نقشہ غائب کرنے کی خبروں کی تردید کی ہے اور کہا ہے کہ سرکاری نصاب تعلیم میں ایسی کوئی کتاب نہیں جس میں فلسطین کا نقشہ موجود نہ ہو۔وزارت تعلیم کی طرف سے جاری کردہ بیان میں کہا گیاہے کہ سماجی رابطوں کی ویب سائیٹس اور بعض آن لائن نیوز ویب سائیٹس میں ایک افواہ چل رہی ہے کہ مراکش میں درسی کتب میں فلسطین کا نقشہ غائب ہے۔ ایسا ہرگز نہیں۔بیان میں کہا گیا ہے کہ درسی کتب میں فلسطین کے نقشے اس کے نام کے ساتھ موجود ہیں اور ایسی اور کوئی کتاب نہیں جس میں اس طرح کا کوئی واقعہ پیش آیا ہو۔ حکومت ان افواہوں کی سختی سے تردید کرتی ہے۔ اس طرح کی جعلی خبروں اور افواہوں کا مقصد حکومت کو بدنام کرنا اور منفی پروپیگنڈے کو فروغ دینا ہے۔جمعرات کو مراکش کی طلباء یونین کی طرف سے وزیر تعلیم سعید امزازی سے مطالبہ کیا گیا تھا کہ وہ ذرائع ابلاغ میں آنے والی خبروں کے مطابق نصابی کتاب میں فلسطین کا نقشہ غائب ہونے کی تحقیقات کرائیں۔

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here