بنگلورو:23 ڈسمبر(سیدھی بات نیوز سروس/ زرائع)کرناٹک کی کابینہ میں آخرکار آج توسیع عمل میں آئی۔ بنگلورو کے راج بھون میں منعقدہ حلف برداری تقریب میں کانگریس کے 8ارکان اسمبلی نے کابینہ وزیر کی حیثیت سے حلف لیا۔ ریاست کے گورنر واجو بھائی والا نے نئے وزرائ کو عہدے اور رازداری کا حلف دلوایا۔ اس موقع پر وزیراعلی ایچ ڈی کماراسوامی اور نائب وزیراعلی جی پرمیشور موجود تھے۔ ریاستی کابینہ میں شامل 8نئے چہروں میں ایک مسلم نمائندے کو بھی شامل کیا گیا ہے۔ بیدر کے رکن اسمبلی رحیم خان نے کابینی وزیر کی حیثیت سے حلف لیا۔کانگریس کے سینئر لیڈر ایم بی پاٹل، ستیش جارکی ہولی، آر بی تما پور، سی ایس شیولّی، پی ٹی پرمیشور نائک، ای تُکارام، ایم ٹی بی ناگراج نے کابینہ وزیر کی حیثیت سے حلف اُٹھایا۔ رحیم خان نے اللہ کے نام پرانگریزی زبان میں حلف لیا۔ کرناٹک میں کانگریس اور جے ڈی ایس مخلوط حکومت کی کابینہ کی یہ پہلی توسیع ہے۔جے ڈی ایس کے کوٹے میں کابینہ کی دو نشستیں خالی ہیں۔ لیکن آج ہوئی حلف برداری تقریب میں جے ڈی ایس سے کسی نمائندے نے حلف نہیں لیا۔ جبکہ کانگریس نے موجودہ کابینہ میں 2 وزرائ رمیش جارکی ہولی اور آر شنکر کو سبکدوش کرتے ہوئے،8نئے ارکان کو کابینہ میں شامل کیاہے۔ کابینہ میں شامل کئے گئے زیادہ تر نئے وزارئ کا تعلق شمالی کرناٹک سے ہے۔ کچھ دنوں پہلے کانگریس کے مسلم لیڈروں نے پارٹی اعلی کمان سے ریاستی کابینہ میں مزید ایک مسلم نمائندہ کوشامل کرنے کا مطالبہ کیاتھا۔نئی دہلی میں ہوئی کانگریس پارٹی کی میٹنگ میں حیدرآباد کرناٹک خطہ سے تعلق رکھنے والے رکن اسمبلی رحیم خان کے نام پر اتفاق ہوا۔ رحیم خان کی شمولیت کے بعد کرناٹک کی کابینہ میں مسلم نمائندوں کی تعداد دو سے بڑھ کر تین ہوگئی ہے۔ ضمیراحمد خان اور یوٹی قادر ریاستی کابینہ میں پہلے ہی سے شامل ہیں۔ گلبرگہ کے رکن اسمبلی قمرالاسلام کے انتقال کے بعد حیدرآباد کرناٹک سے مسلم نمائندوں کا شامل کرنے کا پُرزور مطالبہ کیاجارہاتھا۔ تاخیر سے ہی صحیح کانگریس پارٹی نے مسلم طبقہ کی اس مانگ پرغورکیاہے۔ بحرحال چار ماہ کے انتظار کے بعد کرناٹک کی کابینہ میں آج ہوئی توسیع عمل میں آئی ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here