سعودی عرب:07 نومبر(سیدھی بات نیوز سروس/ زرائع) سعودی عرب کے فرماں روا شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے منگل کی شام القصیم صوبے کے دورے کے موقع پر وہاں کے لوگوں کی جانب سے منعقد کی جانے والی استقبالیہ تقریب میں شرکت کی۔ شاہ سلمان کے ساتھ سعودی ولی عہد اور وزیر دفاع شہزادہ محمد بن سلطان بھی تھے۔اپنے دورے کے موقع پر شاہ سلمان نے صوبے کی جیلوں میں موجود اُن تمام تنگ دست قیدیوں کو رہا کرنے کی ہدایت جاری کی جن پر کوئی فوج داری مقدمہ نہیں اور اُن پر واجب الادا رقم دس لاکھ ریال سے زیادہ نہیں ہے۔ سعودی فرماں روا نے مذکورہ قیدیوں پر واجب الادا رقم ادا کرنے کی بھی ہدایت کی۔خادم الحرمین الشریفین آج بدھ کے روز القصیم صوبے میں 16 ارب ریال سے زیادہ لاگت کے 600 سے زیادہ مختلف منصوبوں کا افتتاح کریں گے اور سنگ بنیاد رکھیں گے۔ یہ منصوبے ترقیاتی، تعلیمی، ہاؤسنگ، سڑکوں، ماحولیات، پانی، بجلی اور خدمات عامہ سے متعلق ہیں۔القصیم کے گورنر شہزادہ ڈاکٹر فيصل بن مشعل بن سعود بن عبدالعزيز کے مطابق یہ منصوبے علاقے میں امن و امان اور ترقی کو مزید بلندیوں تک پہنچائیں گے اور ان سے آنے والی نسلیں بھی مستفید ہوں گی۔ انہوں نے کہا کہ القصیم کو دیگر صوبوں کی طرح مملکت کی قیادت کی بھرپور توجہ حاصل ہے۔ گورنر نے باور کرایا کہ یہ صوبہ اپنے قدرتی وسائل، جغرافیائی محلِ وقوع اور تاریخی ورثے کے سبب منفرد اہمیت کا حامل ہے۔

SHARE

LEAVE A REPLY

Please enter your comment!
Please enter your name here